×

Warning

JUser: :_load: Unable to load user with ID: 830

مہدی حسن، مداحوں سے بچھڑے 2 سال ہو گئے

June 13, 2014 941

شہنشاہ غزل مہدی حسن کو مداحوں سے بچھڑے دو سال بیت گئے، لیکن مداحوں کے دلوں میں وہ آج بھی زندہ ہیں۔مہدی حسن

نے 18 جولائی 1927 کو راجستھان کے ایک موسیقار گھرانے میں آنکھ کھولی تو کسی کو اندازہ نہ تھا کہ یہ بچہ ایک روز آسمان موسیقی کے افق پرچاند بن کر چمکے گا۔قیام پاکستان کے بعد مہدی حسن اہل خانہ کے ہمراہ پاکستان آگئے۔بچپن سے موسیقی کی تربیت حاصل کرنے والے مہدی حسن نے 1957 میں ریڈیو پاکستان سے سْرسنگیت کے سفر کا آغاز کیا۔لاتعداد کلاسیکی ونیم کلاسیکی گیت ، فلمی نغمات اورغزلیں گائیں۔ غزل گائیکی میں انہیں ایسا کمال حاصل تھا کہ شہنشاہ غزل کہلائے۔ان کی فنکارانہ صلاحیتوں کے اعتراف میں انہیں تمغہ حْسن کارکردگی اور ہلال امتیاز سمیت متعدد ایوارڈز واعزازات سے نوازا گیا۔ دو سال قبل آج ہی کے روز مہدی حسن طویل علالت کے بعد کراچی میں انتقال کرگئے۔ ان کے انتقال سے موسیقی کی دنیا میں جو خلا پیدا ہوا وہ شاید کبھی پْر نہ ہو سکے لیکن ان کے گائے ہوئے رسیلے گیت اورسریلی غزلیں سننے والوں کے کانوں میں رس گھولتی رہیں گی۔

Last modified on Friday, 13 June 2014 11:20
Login to post comments