×

Warning

JUser: :_load: Unable to load user with ID: 830

42۔ دعاۓ ختم القرآن

October 24, 2013 579

بارالہا! تو نے اپنی کتاب کے ختم کرنے پر میری مدد فرمائی۔ وہ کتاب جسے تو نے نور بنا کر اتارا اور تمام کتب سماویہ پر اسے گواہ بنایا اورہر

اس کلام پر جسے تو نے بیان فرمایا اسے فوقیت بخشی اور (حق وباطل میں ) حد فاصل قرار دیا ۔ جس کے ذریعہ حلال وحرام الگ الگ کر دیا۔ وہ قرآن جس کے ذریعہ شریعت کے احکام واضح کئے۔ وہ کتاب جسے تو نے اپنے بندوں کے لیے شرح وتفصیل سے بیان کیا اوروہ وحی (آسمانی ) جسے اپنے پیغمبر محمد صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم پر نازل فرمایا جسے وہ نور بنایا جس کی پیروی سے ہم گمراہی وجہالت کی تاریکیوں میں ہدایت حاصل کرتے ہیں اور اس شخص کے لیے اسے شفا قرار دیا جو اس پر اعتقاد رکھتے ہوئے اسے سمجھنا چاہے اورخاموشی کے ساتھ اسے سنے اوروہ عدل وانصاف کا ترازو بنایا جس کا کانٹا حق سے ادھر ادھر نہیں ہوتا اور وہ نور ہدایت قرار دیا جس کی دلیل وبرہان کی روشنی ( توحید ونبوت کی) گواہی دینے والوں کے لیے بجھتی نہیں اور وہ نجات کا نشان بنایا کہ جو اس کے سیدھے طریقہ پر چلنے کا ارادہ کرے ۔ وہ گمراہ نہیں ہوتا اورجو اس کی ریسمان کے بندھن سے وابستہ ہو وہ (خوف فقر وعذاب کی ) ہلاکتوں سے دسترس سے باہر ہوجاتا ہے ۔ بارالہا!جب کہ تو نے اس کی تلاوت کے سلسلہ میں ہمیں مدد پہنچائی اور اس کی حسن ادائیگی کے لیے ہماری زبان کی گرہیں کھول دیں تو پھر ہمیں ان لوگوں میں سے قرار دے جو اس کی پوری طرح حفاظت ونگہداشت کرتے ہوں اوراس کی محکم آیتوں کے اعتراف وتسلیم کی پختگی کے ساتھ تیری اطاعت کرتے ہوں اور متشابہ آیتوں اور روشن وواضح دلیلوں کے اقرار کے سایہ میں پناہ لیتے ہوں ۔ اے اللہ ! تو نے اسے اپنے پیغمبر محمد صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم پر اجمال کے طور پر اتارا اوراس کے عجائب واسرار کا پورا پورا علم انہیں القا کیا اوراس کے علم تفصیلی کا ہمیں وارث قرار دیا۔ اورجو اس کا علم نہیں رکھتے ان پر ہمیں فضیلت دی اور اس کے مقتضیات پر عمل کرنے کی قوت بخشی تا کہ جو اس کے حقائق کے متحمل نہیں ہو سکتے ان پر ہماری فوقیت وبرتری ثابت کر دے ۔ اے اللہ ! جس طرح تو نے ہمارے دلوں کو قرآن کا حامل بنایا اوراپنی رحمت سے اس کے فضل وشرف سے آگاہ کیا یوں ہی محمد پر جو قرآن کے خطبہ خواں ، اوران کی آل پر جو قرآن کے خزینہ دار ہیں رحمت نازل فرما اور ہمیں ان لوگوں میں قرار دے جو یہ اقرار کرتے ہیں کہ یہ تیری جانب سے ہے تاکہ اس کی تصدیق میں ہمیں شک وشبہ لاحق نہ ہو اور اس کے سیدھے راستہ سے رو گرادنی کا خیال بھی نہ آنے پائے۔ اے اللہ ! محمد اور ان کی آل پر رحمت نازل فرما اور ہمیں ان لوگوں میں سے قرار دے جو اس کی ریسمان سے وابستہ اورمشتبہ امور میں اس کی محکم پناہ گاہ کا سہارا لیتے اوراس کے پروں کے زیر سایہ منزل کرتے اس کی صبح درخشاں کی روشنی سے ہدایت پاتے اور اس کے نور کی درخشندگی کی پیروی کرتے اوراس کے چراغ سے چراغ جلاتے ہیں اوراس کے علاوہ کسی سے ہدایت کے طالب نہیں ہوتے ۔ بارالہا!جس طرح تو نے اس قرآن کے ذریعہ محمد صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کو اپنی رہنمائی کا نشان بنایا ہے اوران کی آل کے ذریعہ اپنی رضا وخوشنودی کی راہیں آشکارا کی ہیں یونہی محمد اور ان کی آل پر رحمت نازل فرما اورہمارے لیے قرآن کو عزت وبزرگی کی بلند پایہ منزلوں تک پہنچنے کا وسیلہ اورسلامتی کے مقام تک بلند ہونے کا زینہ اورمیان حشر میں نجات کو جزا میں پانے کا سبب اورمحل قیام (جنت) کی نعمتوں تک پہنچنے کا ذریعہ قرار دے۔ اے اللہ ! محمد اوران کی آل پررحمت نازل فرما اورقرآن کے ذریعہ گناہوں کا بھاری بوجھ ہمارے سر سے اتار دے اورنیکوکاروں کے اچھے خصائل وعادات ہمیں مرحمت فرما اور ان لوگوں کے نقش قدم پر چلا جو تیرے لیے رات کے لمحوں اور صبح وشام (کی ساعتوں ) میں اسے اپنا دستور العمل بناتے ہیں تا کہ اس کی تطہیر کے وسیلہ سے تو ہمیں ہر آلودگی سے پاک کر دے اور ان لوگوں کے نقش قدم پر چلائے جنہوں نے اس کے نور سے روشنی حاصل کی ہے اور امیدوں نے انہیں عمل سے غافل نہیں ہونے دیا کہ انہیں اپنے فریب کی نیرنگیوں سے تباہ کردیں۔اے اللہ ! محمد اور ان کی آل پر رحمت نازل فرما اور قرآن کو رات کی تاریکیوں میں ہمارا مونس اورشیطان کے مفسدوں اوردل میں گزرنے والے وسوسوں سے نگہبانی کرنے اورہمارے قدموں کو نافرمانیوں کی طرف بڑھنے سے روک دینے والا اورہماری زبانوں کو باطل پیمائیوں سے بغیر کسی مرض کے کنگ کر دینے والا اورہمارے اعضاء کو ارتکاب گناہ سے باز رکھنے والا اورہماری غفلت ومدہوشی نے جس دفتر عبرت وپند اندوزی کو تہہ کر رکھا ہے اسے پھیلانے والا قراردے تا کہ اس کے عجائب ورموز کی حقیقتوں اور اس کی متنبہ کرنے والی مثالوں کو کہ جنہیں اٹھانے سے پہاڑ اپنے استحکام کے باوجود عاجز آچکے ہیں ہمارے دلوں میں اتار دے ۔اے اللہ ! محمد اور ان کی آل پر رحمت نازل فرما اور قرآن کے ذریعہ ہمارے ظاہر کو ہمیشہ صلاح ورشد سے آراستہ رکھ اور ہمارے ضمیر کی فطری سلامتی سے غلط تصورات کی دخل دراندازی کو رو ک دے اور ہمارے دلوں کی کثافتوں اورگناہوں کی آلودگیوں کو دھو دے اور اس کے ذریعہ ہمارے پراگندہ امور کی شیرازہ بندی کر اور میدان حشر میں ہماری جھلسی ہوئی دوپہروں کی تپش وتشنگی بجھا دے اور سخت خوف وہراس کے دن جب قبروں سے اٹھیں تو ہمیں امن وعافیت کے جامے پہنا دے ۔ اے اللہ ! محمد اور ان کی آل پر رحمت نازل فرما اور قرآن کے ذریعہ فقرواحتیاج کی وجہ سے ہماری خستگی وبدحالی کا تدارک فرما اور زندگی کی کشائش اور فراخ روزی کی آسودگی کا رخ ہماری جانب پھیر دے ، بری عادات اور پست اخلاق سے ہمیں دور کر دے اورکفر کے گڑھے ( میں گرنے ) اور نفاق انگیز چیزوں سے بچا لے تاکہ وہ ہمیں قیامت میں تیری خوشنودی و جنت کی طرف بڑھانے والا اوردنیا میں تیری ناراضگی اور حدود شکنی سے روکنے والا ہو اوراس امر پر گواہ ہو کہ جو چیز تیرے نزدیک حلال تھی اسے حلال جانا اور جو حرام تھی اسے حرام سمجھا ۔ اے اللہ ! محمد اور ان کی آل پر رحمت نازل فرما اور اس قرآن کے وسیلہ سے موت کے ہنگام نزع کی اذیتوں ، کراہنے کی سختیوں اور جان کنی کی لگاتار ہچکیوں کو ہم پر آسان فرما جب کہ جان گلے تک پہنچ جائے اورکہا جائے کہ کوئی جھاڑ پھونک کرنے والا ہے ( جو کچھ تدارک کرے) اور ملک الموت غیب کے پردے چیر کر قبض روح کے لیے سامنے آئے اور موت کی گمان میں فراق کی دہشت کے تیر جوڑ کر اپنے نشانہ کی زد پر رکھ لے اورموت کے زہریلے جام میں زہر ہلاہل گھول دے اورآخرت کی طرف ہمارا چل چلاؤ اورکوچ قریب ہو اورہمارے اعمال ہماری گردن کا طوق بن جائیں اور قبریں روز حشر کی ساعت تک آرام گاہ قرار پائیں ۔اے اللہ ! محمد اور ان کی آل پر رحمت نازل فرما اور کہنگی وبوسیدگی کے گھر میں اترنے اورمٹی کی تہوں میں مدت تک پڑے رہنے کو ہمارے لیے مبارک کرنا اور دنیا سے منہ موڑنے کے بعد قبروں کو ہمارا اچھا گھر بنانا اوراپنی رحمت سے ہمارے لیے گور کی تنگی کو کشادہ کر دینا اورحشر کے عام اجتماع کے سامنے ہمارے مہلک گناہوں کی وجہ سے ہمیں رسوا نہ کرنا ۔ اور اعمال کے پیش ہونے کے مقام پر ہماری ذلت وخواری کی وضع پر رحم فرمانا ۔ اور جس دن جہنم کے پل پر سے گززنا ہو گا تو اس کے لڑکھڑانے کے وقت ہمارے ڈگمگاتے ہوۓ قدموں کو جما دینا اور قیامت کے دن ہمیں اس کے ذریعہ ہر اندوہ اورروز حشر کی سخت ہولناکیوں سے نجات دینا۔ اورجبکہ حسرت وندامت کے دن ظالموں کے چہرے سیاہ ہوں گے ہمارے چہروں کو نورانی کرنا اور مومنین کے دلوں میں ہماری محبت پیدا کردے اورزندگی کو ہمارے لیے دشوار گزار نہ بنا ۔ اے اللہ ! محمد جو تیرے خاص بندے اور رسول ہیں ان پر رحمت نازل فرما جس طرح انہوں نے تیرا پیغام پہنچایا ۔ تیری شریعت کو واضع طور سے پیش کیا اورتیرے بندو ں کو پند ونصیحت کی ۔ اے اللہ ! ہمارے نبی صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کو قیامت کے دن تمام نبیوں سے منزلت کے لحاظ سے مقرب تر ،شفاعت کے لحاظ سے بر تر قدر ومنزلت کے اعتبار سے بزرگ تر اور جاہ ومرتبت کے اعتبار سے ممتاز تر قرار دے ۔ اے اللہ ! محمد اور ان کی آل پر رحمت نازل فرما اوران کے ایوان (عزوشرف ) کو بلند ،ان کی دلیل وبرہان کو عظیم اوران کے میزان (عمل کے پلہ)کو بھاری کر دے ۔ ان کی شفاعت کو قبول فرما اور ان کی منزلت کو اپنے سے قریب کر ان کے چہرے کو روشن ، ان کے نور کو کامل اور ان کے درجہ کوبلند فرما ، اور ہمیں انہی کے آئین پرزندہ رکھ اور انہی کے دین پر موت دے اور انہی کی شاہراہ پر گامزن کر اور انہی کے راستہ پر چلا اور ہمیں ان کے فرمانبرداروں میں سے قراردے اور ان کی جماعت میں محشور کر اور ان کے حوض پر اتار اور ان کے ساغر سے سیراب فرما ۔ اے اللہ ! محمد اوران کی آل پر ایسی رحمت نازل فرما جس کے ذریعہ انہیں بہترین نیکی ، فضل اورعزت تک پہنچا دے جس کے وہ امید وار ہیں اس لیے کہ تو وسیع رحمت اورعظیم فضل واحسان کا مالک ہے۔ اے اللہ ! انہو ں نے تیرے پیغامات کی تبلیغ کی ۔ تیری آیتوں کو پہنچایا ۔ تیرے بندوں کو پند ونصیحت کی اور تیری راہ میں جہاد کیا،ان سب کی انہیں جزا دے جو ہر اس جزا سے بہتر ہو جو تو نے مقرب فرشتوں اور بزگزیدہ مرسل نبیوں کو عطا کی ہو ان پر اور ان کی پاک وپاکیزہ آل پر سلام ہو اوراللہ تعالی ٰ کی رحمتیں اور برکتیں ان کے شامل حال ہوں ۔

اللهم إنك اعنتني علي ختم كتابك الذي انزلته نورا ، و جعلته مهيمنا علي كل كتاب انزلته ، و فضلته علي كل حديث قصصته .و فرقانا فرقت به بين حلالك و حرامك ، و قرآنا اعربت به عن شرائع احكامك ، و كتابا فصلته لعبادك تفصيلا ، و وحيا انزلته علي نبيك محمد - صلواتك عليه و آله - تنزيلا .و جعلته نورا نهتدي من ظلم الضلالة و الجهالة باتباعه ، و شفاء لمن انصت بفهم التصديق الي استماعه ، و ميزان قسط لا يحيف عن الحق لسانه ، و نور هدي لا يطفأ عن الشاهدين برهانه ، و علم نجاة لا يضل من أم قصد سنته ، و لا تنال ايدي الهلكات من تعلق بعروة عصمته .اللهم فإذ افدتنا المعونة علي تلاوته ، و سهلت جواسي السنتنا بحسن عبارته ، فاجعلنا ممن يرعاه حق رعايته ، و يدين لك باعتقاد التسليم المحكم اياته ، و يفزع الي الاقرار بمبشابهه و موضحات بيناته .اللهم إنك انزلته علي نبيك محمد - صلي الله عليه و آله - مجملا ، و الهمته علم عجائبه مكملا ، و ورثتنا علمه مفسرا ، وفضلتنا علي من جهل علمه ، و قويتنا عليه لترفعنا فوق من لم يطق حمله .اللهم فكما جعلت قلوبنا له حملة ، و عرفتنا برحمتك شرفه و فضله ، فصل علي محمد الخطيب به ، و علي آله الخزان له ، و اجعلنا ممن يعترف بأنه من عندك حتي لا يعارضنا الشك في تصديقه ، و لا يختلجنا الزيغ عن قصد طريقه .اللهم صل علي محمد و آله ، و اجعلنا ممن يعتصم بحبله ، و يأوي من المتشابهات الي حرز معقله ، و يسكن في ظل جناحه ، و يهتدي بضوء صباحه ، و يقتدي بتبلج اسفاره ، و يستصبح بمصباحه ، و لا يلتمس الهدي في غيره .اللهم و كما نصبت به محمدا علما للدلالة عليك ، و انهجت باله سبل الرضا اليك ، فصل علي محمد و آله ، و اجعل القرآن وسيلة لنا الي اشرف منازل الكرامة ، و سلما نعرج فيه الي محل السلامة ، و سببا نجزي به النجاة في عرصة القيمة ، و ذريعة نقدم بها علي نعيم دار المقامة .اللهم صل علي محمد و آله ، و احطط بالقرآن عنا ثقل الاوزار ، و هب لنا حسن شمائل الابرار ، واقف بنا اثار الذين قاموا لك به اناء الليل و اطراف النهار حتي تطهرنا من كل دنس بتطهيره ، و تقفو بنا آثار الذين استضاؤا بنوره ، و لم يلههم الامل عن العمل فيقطعهم بخدع غروره .اللهم صل علي محمد و آله ، و اجعل القرآن لنا في ظلم الليالي مونسا ، و من نزغات الشيطان و خطرات الوساوس حارسا ، و لاقدامنا عن نقلها الي المعاصي حابسا ، و لالسنتنا عن الخوض في الباطل من غير ما آفة مخرسا ، و لجوارحنا عن اقتراف الاثام زاجرا ، و لما طوت الغفلة عنا من تصفح الاعتبار ناشرا ، حتي توصل الي قلوبنا فهم عجائبه ، و زواجر امثاله التي ضعفت الجبال الرواسي علي صلابتها عن احتماله .اللهم صل علي محمد و آله ، وادم بالقرآن صلاح ظاهرنا ، و احجب به خطرات الوساوس عن صحة ضمائرنا ، و اغسل به درن قلوبنا و علائق اوزارنا ، و اجمع به منتشر امورنا ، و ارو به في موقف العرض عليك ظما هواجرنا ، و اكسنا به حلل الامان يوم الفزع الاكبر في نشورنا .اللهم صل علي محمد و آله ، و اجبر بالقرآن خلتنا من عدم الاملاق ، و سق الينا به رغد العيش و خصب سعة الارزاق ، و جنبنا به الضرائب المذمومة و مداني الاخلاق ، و اعصمنا به من هوة الكفر و دواعي النفاق حتي يكون لنا في القيمة الي رضوانك و جنانك قائدا، و لنا في الدنيا عن سخطك و تعدي حدودك ذائدا ، و لما عندك بتحليل حلاله و تحريم حرامه شاهدا .اللهم صل علي محمد و آله ، و هون بالقرآن عند الموت علي انفسنا كرب السياق ، و جهد الانين ، و ترادف الحشارج إذا بلغت النفوس التراقي ، و قيل من راق ؟ و تجلي ملك الموت لقبضها من حجب الغيوب ، و رماها عن قوس المنايا باسهم وحشة الفراق ، و داف لها من ذعاف الموت كأسا مسمومة المذاق ، و دنا منا الي الاخرة رحيل و انطلاق ، و صارت الاعمال قلائد في الاعناق ، و كانت القبور هي المأوي الي ميقات يوم التلاق .اللهم صل علي محمد و آله ، و بارك لنا في حول دار البلي ، و طول المقامة بين اطباق الثري ، و اجعل القبور بعد فراق الدنيا خير منازلنا ، و افسح لنا برحمتك في ضيق ملاحدنا ، و لا تفضحنا في حاضري القيمة بموبقات اثامنا .و ارحم بالقرآن في موقف العرض عليك ذل مقامنا ، و ثبت به عند اضطراب جسر جهنم يوم المجاز عليها زلل اقدامنا ، و نور به قبل البعث سدف قبورنا ، و نجنا به من كل كرب يوم القيمة و شدائد اهوال يوم الطامة .و بيض وجوهنا يوم تسود وجوه الظلمة في يوم الحسرة و الندامة ، و اجعل لنا في صدور المؤمنين ودا ، و لا تجعل الحيوة علينا نكدا .اللهم صل علي محمد عبدك و رسولك كما بلغ رسالتك ، و صدع بامرك ، و نصح لعبادك .اللهم اجعل نبينا - صلواتك عليه و علي آله - يوم القيمة اقرب النبيين منك مجلسا ، و امكنهم منك شفاعة ، و اجلهم عندك قدرا ، و اوجههم عندك جاها .اللهم صل علي محمد و آل محمد ، و شرف بنيانه ، و عظم برهانه ، و ثقل ميزانه ، و تقبل شفاعته ، و قرب وسيلته ، و بيض وجهه ، و اتم نوره ، و ارفع درجته .و احينا علي سنته ، و توفنا علي ملته و خذ بنا منهاجه ، و اسلك بنا سبيله ، و اجعلنا من اهل طاعته ، و احشرنا في زمرته ، و اوردنا حوضه ، و اسقنا بكأسه .و صل اللهم علي محمد و آله ، صلوة تبلغه بها افضل ما يأمل من خيرك و فضلك و كرامتك ، إنك ذو رحمة واسعة ، و فضل كريم .اللهم اجزه بما بلغ من رسالاتك ، و ادي من اياتك ، و نصح لعبادك ، و جاهد في سبيلك ، أفضل ما جزيت احدا من ملائكتك المقربين ، و أنبيائك المرسلين المصطفين ، و السلام عليه و علي آله الطيبين الطاهرين و رحمة الله و بركاته .
Last modified on Wednesday, 13 August 2014 15:24
Login to post comments