×

Warning

JUser: :_load: Unable to load user with ID: 830

40۔ موت کو یاد کرنے کے وقت کی دعا

October 24, 2013 478

اے اللہ !محمد اور ان کی آل پر رحمت نازل فرما اور ہمیں طول طویل امیدوں سے بچائے رکھ اور پر خلوص اعمال کے بجا لانے سے دامن امید

کو کوتاہ کر دے تا کہ ہم ایک گھڑی کے بعد دوسری سانس کے آنے اورایک قدم کے بعد دوسرے قدم کے اٹھنے کی آس نہ رکھیں ۔ ہمیں فریب آرزو اور فتنہ امید سے محفوظ ومامون رکھ اورموت کو ہمارا نصب العین قرار دے اورکسی دن بھی ہمیں اس کی یاد سے خالی نہ رہنے دے اور نیک اعمال میں سے ہمیں ایسے عمل خیر کی توفیق دے جس کے ہوتے ہوئے ہم تیری جانب باز گشت میں دیری محسوس کریں اور جلد سے جلد تیری بارگاہ میں حاضر ہونے کے آرزو مند ہوں ۔ اس حد تک کہ موت ہمارے انس کی منزل ہوجائے جس سے ہم جی لگائیں اور الفت کی جگہ بن جاۓ جس کے ہم مشتاق ہوں اور ایسی عزیز ہو جس کے قرب کو ہم پسند کریں ۔ جب تو اسے ہم پر وارد کرے اور ہم پر لا اتارے تو اس کی ملاقات کے ذریعہ ہمیں سعادت مند بنایا اور جب وہ آئے تو ہمیں اس سے مانوس کرنا اوراس کی مہمانی سے ہمیں بد بخت نہ قرار دینا اور نہ اس کی ملاقات سے ہم کو رسوا کرنا۔ اوراسے اپنی مغفرت کے دروازوں میں سے ایک دروازہ اور رحمت کی کنجیوں میں سے ایک کلید قرار دے اورہمیں اس حالت میں موت آئے کہ ہم ہدایت یافتہ ہوں گمراہ نہ ہوں فرمانبردار ہوں اور (موت سے ) نفرت کرنے والے نہ ہوں ۔ توبہ گزار ہوں خطا کار اور گناہ پر اصرار کرنے والے نہ ہوں۔ اے نیکو کاروں کے اجر وثواب کا ذمہ لینے والے اور بدکرداروں کے عمل وکردار کی اصلاح کرنے والے۔

اللهم صل علي محمد و آله ، و اكفنا طول الامل ، و قصره عنا بصدق العمل حتي لا نؤمل استتمام ساعة بعد ساعة ، و لا استيفاء يوم بعد يوم ، و لا اتصال نفس بنفس ، و لا لحوق قدم بقدم .و سلمنا من غروره ، و امنا من شروره ، و انصب الموت بين ايدينا نصبا ، و لا تجعل ذكر ناله غبا .و اجعل لنا من صالح الاعمال عملا نستبطئ معه المصير اليك ، و نحرص له علي وشك اللحاق بك حتي يكون الموت مأنسنا الذي نأنس به ، و مألفنا الذي نشتاق اليه ، و حامتنا التي نحب الدنو منها .فإذا اوردته علينا و انزلته بنا فاسعدنا به زائرا ، و انسنابه قادما ، و لا تشقنا بضيافته ، و لا تخزنا بزيارته ، و اجعله بابا من ابواب مغفرتك ، و مفتاحا من مفاتيح رحمتك .امتنا مهتدين غير ضالين ، طائعين غير مستكرهين ، تائبين غير عاصين و لا مصرين ، يا ضامن جزاء المحسنين ، و مستصلح عمل المفسدين .
Last modified on Wednesday, 13 August 2014 15:20
Login to post comments