ذاکر نایک کی وطن واپسی ملتوی

ذاکر نایک کی وطن واپسی ملتوی All images are copyrighted to their respective owners.

شیو سینا نے ہندوستان واپسی پر فورا ڈاکٹر ذاکر نائک گرفتاری کا مطالبہ کیا ہے

ممبئی: (ایجنسی) ممبئی واپسی پر گرفتاری کے خدشے کے پیش نظر ذاکر نایک  نے آج آخری لمحات میں مکہ مکرمہ سے وطن واپسی کا ارادہ بدل دیا اور ہندوستان لوٹنے کے بجائے آج یا کل کسی وقت کسی افریقی ملک کے سفر کرنے کا فیصلہ کیا۔

اس سے قبل انہوں نے کہا تھا کہ وہ آج مکہ مکرمہ سے ممبئی واپس لوٹیں گے اور اگلے روز صبح پریس کانفرنس کریں گے۔ اس کے بعد انہوں نے سعودی عرب سے ہی اسکائپ کے ذریعہ پریس سے مخاطب ہونے کا فیصلہ کیا ، لیکن بعد میں یہ ارادہ بھی ترک کردیا۔

ذرائع نے آج یہاں بتایا کہ ذاکر نایک  چند ہفتے کے لئے افریقی ممالک کے سفر پر رہيں گے ، اس کے بعد ہی ہندوستان واپس لوٹیں گے۔

ذرا‏ئع کے مطابق شاید انہیں ہندوستان واپسی پر اپنے خلاف متوقع قانونی کارروائي ہونے کی تشویش ہونے لگی ہے، کیونکہ قومی تفتیشی ایجنسی (این آئي اے) سمیت دیگر تحقیقاتی ایجنسیاں پہلے سے ہی ان کی تقریروں کی جانچ پڑتال شروع کردی ہيں، جن میں ان پر الزام ہے کہ انہوں نے مسلم دہشت گردوں کو ملک اور بیرون ملک میں دہشت گردانہ واقعات کے لئے ترغیب دی ہے۔

خیال رہے کہ ذاکر نایک  ہندوستان اور دنیا بھر میں او ر ٹی وی پر تقریریں کرتے رہے ہيں، لیکن حال ہی میں بنگلہ دیش میں دہشت گردانہ حملہ اور حیدر آباد میں داعش سے وابستہ گروہ کے نوجوانوں کی این آئي  اے کے ذریعہ گرفتاری کے بعد سے وہ سرخیوں میں آگئے ہيں۔ کیونکہ ان دونوں معاملوں میں ملزم روحان امتیاز اور ابراہیم یزدانی نے تحقیقاتکاروں کے سامنے اعتراف کیا ہے کہ انہیں ڈاکٹر ذاکر نایک  کی تقریروں سے ترغیب ملی ہے۔ این آئی اے مبینہ طور پر ذاکر نایک کی ایسی تمام تقریروں کی چھان بین کررہی ہے، جن میں انہوں نے دہشت گردی یا خلاف قانون کسی مسئلے پر بات کی ہے۔

تاہم، ذاکر نایک  نے اپنے خلاف ایسے تمام الزامات کی تردید کی ہے اور میڈیا میں خبریں آنے کے بعد انہوں نے سعودی عرب سے ویڈیو ٹیپ جاری کرکے ان الزامات سے صاف انکار کرتے ہوئے وضاحت پیش کی ہے کہ انہوں نے کسی دہشت گردی کی ہرگز حمایت نہیں کی ہے اور نہ کسی کوغیر انسانی عمل کی ترغیب دی ہے۔

دریں اثناء، شیو سینا نے ہندوستان واپسی پر فورا ڈاکٹر ذاکر نائک گرفتاری کا مطالبہ کیا اور ان کی پیس ٹی وی کو مکمل طور پر بند کرنے کا مطالبہ کیا۔

Rate this item
(0 votes)

Related items