داؤد فون کال معاملہ: پولس نے کھڑسے کو کلین چٹ دی

داؤد فون کال معاملہ: پولس نے کھڑسے کو کلین چٹ دی All images are copyrighted to their respective owners.

گینگسٹر داؤد ابراہیم کے درمیان فون پر کسی طرح کی بات چیت نہیں ہوئی ہے

ممبئی: (ایجنسی)ممبئی پولس نے مہاراشٹر کے ریوینیو وزیر ایکناتھ کھڑسے کو کلین چٹ دیتے ہوئے آج کہا کہ گینگسٹر داؤد ابراہیم کے درمیان فون پر کسی طرح کی بات چیت نہیں ہوئی ہے۔

عام آدمی پارٹی کی پریتی شرما مینن نے کھڑسے پرالزام لگایا تھا کہ انہوں نے فون پر داؤد سے بات چیت کی ہے۔اسی الزام  کے مدنظرمیں ممبئی پولس نے یہ بیان آج جاری کیا ہے۔

ممبئی پولس کے اسسٹنٹ کمشنر (کرائم)نے آج کہا کہ ،’مسٹر کھڑسے کے فون نمبر کی ہماری ابتدائی جانچ سے پتہ چلتاہے کہ ستمبر۲۰۱۵ءسے اپریل۲۰۱۶ءکے درمیان اس نمبر سے داؤد کو کوئی فون کال نہیں کی گئی ۔آپ نے اسی عرصے میں فون کئے جانے کا انکشاف کیاتھا۔

انہوں نے کہا’جب مہاراشٹر کے وزیر کا داؤد سے رابطہ کرنے کا معامہ سامنے آیا تبھی ہم نے جانچ کی۔‘

واضح رہے کہ اے اے پی نے کل منعقد پریس کانفرنس میں یہ دعویٰ کیا تھا کہ مسٹر کھڑسے کو داؤد کی بیوی مہہ جبیں شیخ کے فون نمبر سے کئی فون کال آئی تھیں۔پریتی مینن نے یہ بھی دعویٰ کیا تھا کہ ریاست کے وزیر اعلی دیویندر فڈنوس نے اس معاملے کی جانچ کا حکم دیا ہے۔

مسٹر کھڑسے نے حالانکہ اس الزام کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے صفائی دی ہے کہ ان کے جس فون نمبر کے بارے میں بات چیت کی جارہی ہے وہ گزشتہ ایک سال سے اس کا استعمال ہی نہیں کر رہے ہیں۔

Rate this item
(0 votes)

Related items