ہمارے پاس پانی نہیں، میچ شفٹ کرا لو: فڑنویس

ہمارے پاس پانی نہیں، میچ شفٹ کرا لو: فڑنویس All images are copyrighted to their respective owners.

ان کے پاس پانی نہیں ہے اور اگر آئی پی ایل میچوں کو شفٹ کرایا جاتا ہے تو انہیں کوئی اعتراض نہیں ہوگا

ممبئی: (ایجنسی) بامبے ہائی کورٹ سے آئی پی ایل۔ ۹؍ کے افتتاحی میچ کو ہری جھنڈی ملنے کے ایک دن بعد مہاراشٹر کے وزیر اعلی دیوندر فڑ نویس کا کہنا ہے کہ کرکٹ میدانوں کی مرمت کے لئے ان کے پاس پانی نہیں ہے اور اگر آئی پی ایل میچوں کو شفٹ کرایا جاتا ہے تو انہیں کوئی اعتراض نہیں ہوگا۔

دراصل کورٹ نے ریاستی حکومت سے پوچھا تھا کہ میچوں کے لئے جو پانی دیا جا رہا ہے وہ پینے کے قابل ہے یا نہیں۔فڑنویس نے جمعہ کو کہاکہ اس سال آئی پی ایل میچوں کے لیے ہمارے پاس پینے کے قابل پانی نہیں ہے اور اگر میچوں کو شفٹ کرایا جاتا ہے تو ہمیں اس سے کوئی پریشانی نہیں ہے۔

’ وزیر اعلی کا بیان بامبے ہائی کورٹ کی طرف سے آئی پی ایل۔ نو کے افتتاحی میچ پر روک لگانے سے انکار کرنے کے ایک دن بعد آیا ہے۔

اس درمیان ہندوستانی کرکٹ کنٹرول بورڈ (بی سی سی آئی) کے سیکرٹری انوراگ ٹھاکر کاخشک سالی کی مار جھیل رہے مہاراشٹر میں آئی پی ایل میچوں میں پانی کے استعمال پر ممبئی انڈینس اور رائزنگ پنے سپرجاینٹس کے نمائندوں سے ملاقات کرنے کا امکان ہے۔

میٹنگ میں میچ کو منتقل کرنے یا نہ کرنے کے علاوہ بی سی سی آئی پچوں کی دیکھ بھال کے لئے پانی خرید سکتا ہے یا نہیں اس بات پر تبادلہ خیال کیا جائے گا۔

ذرائع نے کہا کہ ٹھاکر ان دونوں فرنچائزی کے مالکان کے ساتھ ملاقات کریں گے۔انہوں نے کہا کہ یہ ایک سنگین مسئلہ ہے اور بورڈ کو تیار رہنے اور ہنگامی منصوبہ تیار رکھنے کی ضرورت ہے۔

Rate this item
(0 votes)

Related items